Ghuroor toot gaya koi martaba na mila

  • By:

Ghuroor toot gaya koi martaba na mila

jafa k baad unhe hasil-e-jafa na mila


Sar-E-hussain mila hai yazeed ko laikin

Shikast ye hai ke phir bhi jhuka howa na mila۔

غرور ٹوٹ گیا ، کوئی مرتبہ نہ ملا

ستم کے بعد بھی کچھ حاصل جفا نہ ملا


سر حسین ملا ہے یزید کو لیکن

شکست یہ ہے کہ پھر بھی جھکا ہوا نہ ملا


SOURCE :

Book :

Edition :

Publication :

Advertizement


Coments